پیغمبرِ اسلام حضرت محمد مصطفیٰ صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کی مدحت، تعریف و توصیف، شمائل و خصائص کے نظمی اندازِ بیاں کو نعت یا نعت خوانی یا نعت گوئی کہا جاتا ہے۔عربی زبان میں نعت کیلئے لفظ "مدحِ رسول" استعمال ہوتا ہے۔ اسلام کی ابتدائی تاریخ میں بہت سے صحابہ اکرام نے نعتیں لکھیں اور یہ سلسلہ آج تک جاری و ساری ہے۔ نعتیں لکھنے والے کو نعت گو شاعر جبکہ نعت پڑھنے والے کو نعت خواں یا ثئاء خواں بھی کہا جاتا ہے۔

Friday, 31 July 2015

Naat- main madeene se lekin bohot door hun

الحمد لله رب العالمين والصلاة والسلام على سيد الأنبياء والمرسلين أما بعد فاعوذ بالله من الشيطان الرجيم بسم الله الرحمن الرحيم

main madeene se lekin bohot door hun...
ye khalish mere dil ko gawara nhi...
Mustafa صلى الله عليه وسلم  ka Khuda عزوجل  aur khud Mustafa صلى الله عليه وسلم  ...
kyun kahun mera koi sahara nhi...

Aapka ishq h ishq e Tabbul ula...
aapka zikr h khas zikr e Khuda...
khud Khuda ne ye Qur'a'n me ye aila'n kiya...
jo tumhara nhi wo hamara nhi...

Aqal e jinn o bashar ka yahan zikr kya...
Aqal e roohul amin tk to hairaan h...
Azmate Mustafa ki mile hadd kise...
Ye wo darya h jiska kinara nhi...

apne roze pe bulwayenge ek din...
Ay sikandar zra sabr se kaam le...
unke dar ka gda aur mayoos ho...
mere Sarkar ko ye gawara nhi..

No comments:

Post a Comment