پیغمبرِ اسلام حضرت محمد مصطفیٰ صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کی مدحت، تعریف و توصیف، شمائل و خصائص کے نظمی اندازِ بیاں کو نعت یا نعت خوانی یا نعت گوئی کہا جاتا ہے۔عربی زبان میں نعت کیلئے لفظ "مدحِ رسول" استعمال ہوتا ہے۔ اسلام کی ابتدائی تاریخ میں بہت سے صحابہ اکرام نے نعتیں لکھیں اور یہ سلسلہ آج تک جاری و ساری ہے۔ نعتیں لکھنے والے کو نعت گو شاعر جبکہ نعت پڑھنے والے کو نعت خواں یا ثئاء خواں بھی کہا جاتا ہے۔

Tuesday, 3 September 2013

SALAAM - HOON IMAMUL AMBIYA PE SUM BA DUM LAKHON SALAAM

الحمد لله رب العالمين والصلاة والسلام على سيد الأنبياء والمرسلين أما بعد فاعوذ بالله من الشيطان الرجيم بسم الله الرحمن الرحيم


Hoon imamul ambiya pe dum ba dum lakhon salaam...
Hoon muhammad mustafa pe dum ba dum lakhon salaam!!!


Chand ke tukde kiye they jis nabi ne marhaba...
Us habib e kibriya pe dum ba dum lakhoon salaam!!!


Jinn bhi padte hain tera kalima madeene k makeen...
Tujh rasool e ba safa pe dum ba dum lakhoon salaam!!!


Jisne suraj ko ubhara dubne ke baad bhi...
Us muhammad mustafa pe dum ba dum lakhoon salaam!!!


Jisne jo chaha use wo kar diya tum ne ata...
Rehmat e rabbul ula pe dam ba dam lakhoon salaam!!!


Ummati hi ummati jisne pukara har jagah...
Aise pyare jaan fiza pe dum ba dum lakhoon salaam!!!


Jisne murdoon ko kiya zinda khuda ke hukm se...
Us gulaam e mustafa pe dum ba dum lakhoon salaam!!!



No comments:

Post a Comment